Kashif Hafeez Siddiqui

Archive for February 1st, 2018|Daily archive page

مثالیں ، پیغام اور مسلم لیگی قیادت

In Urdu Columns on February 1, 2018 at 8:22 am

#سپریم_کورٹ ۔ مجھے کیوں نکالا؟
اورسپریم کورٹ پہ کی جانے والی تسلسل کے ساتھ مسلم لیگی تنقید یا دشنام ترازی کا جواب پہلے اشاروں اور استعاروں کے زریعے دے رہی تھی اور اب آج #نہال_ہاشمی_کیس کے فیصلے کے زریعے مثال قائم کر کے واضح پیغام دے دیا ہے

images (14)

#سپریم_کورٹ پہ جلسوں میں کی جانے والی تنقید کا جواب حکومت پنجاب کے ہسپتالوں میں جا کر Management Capabilities کو چیلنج کیا ۔ جو کہ عوام #سپریم_کورٹ کی اس موومنٹ کو اپنا مسئلہ حل ہوتے دیکھ کر تحسین کی نگاہ سے دیکھ رہے ہیں

اسی طرح سندھ کی حکومت کو پانی ، زمینوں پہ ناجائیز قبضوں اوردودھ کی کوالٹی پہ گھیرا گیا ہے ۔#عدالتیں آئ جی سندھ کی پشتبان بن کر سامنے آئ ہیں ۔ جب ہی بلالول بھٹو نے جیوڈیشنل کمیشن کو نہ بلانے پہ تنقید کی ۔ وزیر اعلی سندھ بھی چلتے پھرتے عدالتوں کی وجہ سے اپنی بے بسی کا اظہار کر ہی دیتے ہیں

عدالتی فیصلوں پہ کی جانے والی کھلے عام تنقید کے خلاف پہلی مثال #نہال_ہاشمی کو بنا دیا گیا ہے ۔ باوجود انکی غیر مشروط معافی کے عدالتوں نے انکو معاف نہیں کیا ۔ 5 سال کیلئے نااہل ، جرمانہ اور ایک ماہ کی قید سنا دی گئ

یہ سزا ہے یا پیغام اسکے لئیے شام 7 بجے سے لیکر 12 بجے تک مختلف تجزیہ نگار ٹی وی پہ ایران طوران کی کہانی سنائیں گے ۔ مگر ہم جیسے نکموں کی نظر میں یہ ایک پیغام ہے کہ جب کہ عدالتوں میں مسلم لیگی زعما کے خلاف #توہین_عدالت کا کیس سماعت کیلئے منظور کر لیا گیا ہے تو ایسا اور بہت ساروں کے ساتھ بھی ہو سکتا ہے

الیکشن کچھ ہی فاصلے پہ ہے مسلم لیگی قیادت کو احتیاط برتنی چاہئیے ۔ خیال رکھنا چاہئیے ۔ الفاظ کے استعمال میں محتاط رہیں ۔ آج کل وہ مشکلات میں ہیں ۔ الیکشن کی تیاری کیلئے زہنی اور اعصابی طور پہ انکو Maturity کا اظہار کرنا ہو گا ۔ کچھ تلخ حقائق کو چاہے وہ انکو غلط سمجھیں یا درست بعین ہی ماننا پڑے گا

مسلم لیگ کو چاہیئے کہ اپنے کام کی بنیاد پہ کمپین چلائے ۔ ہوا کے رخ کو دیکھ کر تدبر کے ساتھ فیصلے کریں ۔ منفی سے زیادہ مثبت سوچ اپنائیں ۔ اسی میں انکا بھلا ہے

Advertisements